ٹیکسٹائل انڈسٹری کے مسائل ترجیح بنیادوں پر حل کئے جائیں گے:محمود حسین جعفری

 ایف بی آر کے چیف کمشنر لارج ٹیکس آفس (ایل ٹی او) لاہور سید محمود حسین جعفری نے اپٹما ممبران کو ٹیکسٹائل انڈسٹری کے سیلز ٹیکس ریفنڈز، ڈیفرڈ کلیمز، زیر التواءریفنڈز اور واجبات کی ایڈجسٹمنٹ اور استثنیٰ سرٹیفکیٹ سے متعلق مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کرانے کی یقین دہانی کرائی ہے۔ وہ منگل کو اپٹما نارتھ کے دفتر کے دورے کے موقع پر اپٹما ممبران سے گفتگو کر رہے تھے۔ اس موقع پر اپٹما نارتھ کے چیئرمین کامران ارشد اور سیکرٹری جنرل رضا باقر ، کمشنر ایل ٹی او لاہور ڈاکٹر علی عدنان زیدی بھی موجودتھے۔

چیف کمشنر ایل ٹی او نے کہا کہ فیڈرل بورڈ آف ریونیو نے بڑے ٹیکس دہندگان کے ریونیو جنریشن کے کردار کو تسلیم کرتے ہوئے انکے مسائل کو حل کرنے کے لیے ایل ٹی اوز قائم کیے ہیں۔انہوں نے برآمدات اور روزگار میں اضافے میں اپٹما کے کردار کو سراہا۔ انہوں نے کہا کہ ایف بی آر نے جولائی 2023 سے اب تک 10 ارب روپے کے ریفنڈز ادا کیے ہیں، جن میں موخر شدہ رقم بھی شامل ہے۔انہوں نے اپٹما کے ممبران کی فہرست مانگی جو ابھی تک ریفنڈز حاصل کرنے میں کامیاب نہیں ہو سکے ہیں تاکہ کارروائی کو تیز کیا جا سکے۔اس تجویز کے جواب میں کہ ایل ٹی او کو ٹیکس ایڈجسٹمنٹ کی اجازت دینی چاہیے، انہوں نے کہا کہ ایف بی آر پہلے ہی ٹیکس دہندگان کی سہولت کے لیے انٹر ٹیکس ایڈجسٹمنٹ پر کارروائی کر رہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں