پٹرولیم قیمتوں میں اضافہ ،کاروباری حلقوں اور تاجروں کے اوسان خطاہوچکے ہیں، پیاف

ایگزیکٹو بورڈ ممبر پیاف عمر سرفراز نے کہا ہے کہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں اتنی تیزی سے بڑھ رہی ہیں کہ ملک میں مہنگائی کا ریلہ آگیا ہے۔ پٹرول سے لے کر ادویات تک کی قیمتوں میں شدید اضافے نے ملک میں امید اور بہتری کی فضاء کو شدید کمزور کردیا ہے۔ کاروباری حلقے تاجر دکانداروں کے اوسان خطا ہوچکے ہیں۔ کاروبار دن بدن تاریک راہ کی طرف جارہے ہیں۔ غربت کی شرح بڑھ رہی ہے۔ مہنگائی کی چکی میں غریب عام آدمی اور متوسط طبقہ پس رہا ہے۔ تجارتی حلقے بحران اور معاشی بدحالی کی وجہ سے شدید مشکلات سے دوچار ہیں۔ عوام مہنگائی کی شرح میں بدترین اضافے سے بدحال اور ہر گزرتے دن کے ساتھ مشکلات کی کے نرغے میں جارہے ہیں۔

 ملک میں کاروباری حلقے مسلسل دشوار اور کٹھن حالات سے گزر رہے ہیں۔ حکومت غریب اور متوسط طبقے کیلئے بجلی گیس پٹرول کی قیمتوں میں کمی لے کر آئے۔ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی لائے بغیر عوام کی اذیت اور بے چینی ختم نہیں ہوسکتی۔ مہنگائی کے اگر سونامی کو فی الفور نہ روکا گیا تو بے روزگاری اور غربت کا جن بوتل سے باہر آجائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں